Hindi Urdu

دہلی کی ساتوں سیٹوں پر ہوگا کانگریس کا قبضہ: ایاز ہاشمی

یہ ڈاکٹر امبیڈکر کا احسان ہے کہ انہوں نے امبانی اور عام آدمی کے ووٹ کو برابر کا درجہ دیا: ایڈوکیٹ ارم ہاشمی

وطن سماچار ڈیسک
کانگریس پارٹی کے سینئر لیڈر اورپیس آل ویز کے چیئر مین حکیم ایاز ہاشمی نے آج اپنی اہلیہ ایڈوکیٹ اِرم ہاشمی کے ساتھ اپنا ووٹ ڈالا۔

نئی دہلی،12مئی: کانگریس پارٹی کے سینئر لیڈر اورپیس آل ویز کے چیئر مین حکیم ایاز ہاشمی نے آج اپنی اہلیہ ایڈوکیٹ اِرم ہاشمی کے ساتھ اپنا ووٹ ڈالا۔ووٹ ڈالنے کے بعد صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ دہلی میں کانگریس پارٹی کی لہر کا مخالفین نے بھی تصور نہیں کیا ہوگا۔انہوں نے کہا کہ دہلی میں کانگریس پارٹی کو سبھی سماج کے لوگوں نے پوری طاقت سے نہ صرف مدد کی بلکہ ووٹ بھی دیا ہے اور خوشی کی بات یہ ہے کہ یکطرفہ ووٹ دیا ہے۔ڈاکٹر ہاشمی نے دعویٰ کیا کہ دہلی کی یہ تاریخ ہے کہ جس کو دہلی کی ساتوں سیٹیں ملی ہیں اسی نے دہلی پر راج کیا ہے اور میں یہ دعویٰ سے کہہ سکتا ہوں کہ دہلی میں اس وقت ساتوں نشستیں انڈین نیشنل کانگریس کو ملنے جا رہی ہیں۔

 

انہوں نے کہا کہ دہلی کے لوگ کانگریس کے قومی صدر راہل گاندھی اور دہلی کانگریس کی صدر شیلا دکشت کی قیادت میں یقین رکھتے ہیں۔جہاں لوگوں کو شیلا دکشت کی قیادت والی گزشتہ 15 سال کی حکومت کا کام یاد آرہا ہے وہیں لوگوں کو اس بات کا پورا یقین ہے کہ اقتدار میں آنے کے بعد کانگریس ’نیائے‘ ضرور دے گی۔انہوں نے کہا کہ نہ صرف پورے ملک میں بلکہ دہلی میں بھی نیائے کا جادو سر چڑھ کر بول رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ لوگ بھارتیہ جنتا پارٹی کی ''بانٹو اور راج کرو ''کی پالیسی سے لوگ کافی پریشان ہیں اور جس طرح سے عام آدمی پارٹی نے جھوٹ،افواہ اور فریب کی سیاست کی ہے اس سے لوگ کراہ رہے ہیں، لہذا ان دونوں سے نجات چاہتے ہیں۔

ہاشمی نے دعویٰ کیا کہ دہلی میں عام آدمی پارٹی اور بی جے پی کی ملی بھگت ہے اور اس نے جس طرح سے دہلی والوں کو پریشان کیا ہے وہ کسی سے پوشیدہ نہیں ہے۔آج دہلی کے بچے بھی بیماریوں سے دوچار ہو رہے ہیں۔ معصوم سانس کی بیماریوں سے دوچار ہیں اس لئے لوگوں نے انتقام کے جذبے سے ووٹ کیا ہے۔ فضائی آلودگی نے لوگوں کی زندگی اجیرن کردی ہے۔چند محلہ کلینک کو چھوڑ کر باقی میں بھیڑ بکریاں اور بھینسیں پالی جارہی ہیں۔کانگریس کے دور میں کھولی گئی کلینک بند کردی گئی ہیں۔ سیاست میں اختلافات ہونے چاہئے نہ کہ سینوں میں کدورت،لیکن بی جے پی اور آپ نے سینوں میں کدورت والی سیاست شروع کی ہے جسے دہلی کے لوگ ٹھکرا چکے ہیں۔انہوں نے امید ظاہر کی کہ کانگریس صدر راہل گاندھی ہی ملک کے اگلے وزیراعظم ہوں گے۔اس موقع پر ہاشمی کی اہلیہ ایڈوکیٹ ارم ہاشمی نے کہا کہ وہ ووٹ ڈالنے سے بہت خوش ہے۔انہوں نے کہا کہ ووٹ ہر شہری کا جمہوری حق ہے۔اس کیلئے، وہ آئین کے بانی ڈاکٹر امبیڈکر کی شکر گزار ہیں کہ انہوں نے امبانی اور عام آدمی کے ووٹ کی قیمت کو برابر کا درجہ دیا۔انہوں نے کہاکہ لوگوں کو یہ فیصلہ کرنا ہوگا کہ جب وہ چائے والے کو اپنے بچے کی قسمت طے کرنے کا کام نہیں سونپ سکتے تو پھر چوکیدار کو ملک کی قسمت طے کرنے کا کام کیسے سونپ سکتے ہیں۔ ملک کو چوکیدار نہیں بلکہ کام کرنے والے پڑھے لکھے لوگوں کی ضرورت ہے اور یہ ساری خوبیاں راہل گاندھی میں بدرجہ اتم موجود ہیں۔

You May Also Like

Notify me when new comments are added.