Hindi Urdu

مذہب

فکر وخیالات

مدیر کی قلم سے

Poll

Should the visiting hours be shifted from the existing 10:00 am - 11:00 am to 3:00 pm - 4:00 pm on all working days?

SUBSCRIBE LATEST NEWS VIA EMAIL

Enter your email address to subscribe and receive notifications of latest News by email.

صحتمند جسم بنانے کیلئے آلودگی سے پاک معاشرہ کی تشکیل سرکار کی ذمہ داری: ڈاکٹر ایاز ہاشمی

انہوں نے کہا کہ ہم مختلف میدان میں بچوں کے ساتھ ساتھ بچیوں کی پرورش پر خصوصی توجہ دیتے ہیں ،کیونکہ ہم نے پہلے دن سے یہ سبق پڑھا ہے کہ بچے کو پڑھانے کے ساتھ بچیوں کا بڑھانا اس لیے ضروری ہے کیونکہ جب ایک بچی پڑھ لیتی ہے تو پورا خاندان پڑھ لیتا ہے اس طرح سے پوری ایک نسل کی تربیت ہوجاتی ہے

محمد احمد

نئی دہلی ،29نومبر:مسٹر کشمیر کا خطاب جیت چکے معروف باڈی بلڈر وسیم احمد نے آج پیس آل ویز کے چیئرمین اور کانگریس پارٹی کے سینئر لیڈر ڈاکٹر حکیم ایاز الدین ہاشمی سے ملاقات کی ۔ملاقات کے دوران ہندوستانی تہذیب و ثقافت کے مطابق ڈاکٹر ہاشمی نے مسٹر کشمیر وسیم کو شیلڈ اور شال پیش کرکے ان کا استقبال کیا ۔اس موقع پر مسٹر کشمیر نے ڈاکٹر ہاشمی کو اپنی زندگی کے نشیب و فراز سے واقف کراتے ہوئے کہا کہ اٹھانا خود ہی پڑتا ہے تھکا ہارا بدن اپنا۔ انہوں نے کہا کہ جب تک انسان کے جسم میں جان ہے تب تک اگرویہ تصور کرتا ہے کہ کوئی اسے کاندھا دے گا تو یہ اسکی بیوقوفی ہے۔ مسٹر کشمیر نے کہا کہ حالات جو بھی ہوں ہمیں مثبت سوچ کے ساتھ آگے بڑھنا ہے اور بڑھتے رہنا ہے تاکہ ہم اپنی آنے والی نسلوں کی تربیت کر سکیں ۔اس موقع پر ڈاکٹر ہاشمی نے کہا کہ ہمیں خوشی ہے کہ ہم مسٹر کشمیر کا استقبال آج دہلی کی سر زمین پر کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پڑھائی کے ساتھ ساتھ کھیل اتنا ہی ضروری ہے جتنا کہ گاڑی کے پہیوں کو چلانے کے لیے تیل ضروری ہوتا ہے۔ ڈاکٹر ہاشمی نے اس ملاقات کے دوران انہیں ہاشمی گروپ کے ذریعے تعلیمی اور کھیل کے میدان میں کی جانے والی کاوشوں کے بارے میں بھی مسٹر کشمیر کو واقف کرایا ۔

انہوں نے کہا کہ ہم مختلف میدان میں بچوں کے ساتھ ساتھ بچیوں کی پرورش پر خصوصی توجہ دیتے ہیں ،کیونکہ ہم نے پہلے دن سے یہ سبق پڑھا ہے کہ بچے کو پڑھانے کے ساتھ بچیوں کا بڑھانا اس لیے ضروری ہے کیونکہ جب ایک بچی پڑھ لیتی ہے تو پورا خاندان پڑھ لیتا ہے اس طرح سے پوری ایک نسل کی تربیت ہوجاتی ہے ۔اس موقع پر ڈاکٹر ایاز ہاشمی نے مسٹر کشمیر کو ہر طرح کے تعاون کا وعدہ دلاتے ہوئے کہا کہ وہ ان کے ساتھ کھڑے ہیں ساتھ ہی پالوشن پر بھی بات ہوئی ۔ اس موقع پر انہوں نے کہاکہ پالوشن کے سبب بچوں کی ورزش اور کھیل کافی متاثر ہورہا ہے ۔ اس لئے اگر ایک صحت مند معاشرہ بنانا ہے تو سرکار کی ذمہ داری ہے کہ وہ پالوشن پر فوری کنٹرول کرے تاکہ بچے آزاد ہو کر کھیل کود میں حصہ لے سکیں اور ایک صحتمند زندگی گذار سکیں ۔ انہوں نے کہاکہ ہم کافی دنوں سے سنتے چلے آرہے ہیں کہ سرکار پالوشن کیلئے مصنوعی بارش کا انتظام کررہی ہے ،لیکن اس سمت میں پوری طرح سرد مہری ہے جس سے یہ اندازہ لگایا جاسکتا ہے کہ سرکار کس طرح سے خاموش ہے اور اسے تعمیر ی مسائل سے کوئی سروکار نہیں ہے ۔

You May Also Like

Notify me when new comments are added.