Hindi Urdu

پاکستان میں بھارتی فلموں اور اشتہارات پر پابندی

وطن سماچار ڈیسک
فائل فوٹو: یہ محض ایک علامتی تصویر ہے

ممبئی: ہندوستانی فضائیہ کے ذریعہ سرحد پار جا کر پاکستان میں چل رہے دہشت گرد انہ اڈوں کو تباہ کرنے کے بعد جہاں دونوں ممالک میں کشیدگی مسلسل بڑھ رہی ہے، وہیں پاکستان کی جانب سے بھارتی فلموں اور اشتہارات پر سرکاری طور سے پابندی لگا دی گئی ہے۔پاکستان کے وزیراطلاعات ونشریات چودھری فواد حسین کا کہنا ہے کہ پاکستان کی فلم ایکسیبیٹروں کی ایسوسی ایشن کی جانب سے پاکستانی سینما گھروں میں بھارتی فلموں کی نمائش پر پابندی لگا دی گئی ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ ایسوسی ایشن نے بھارتی فلموں کا بائیکاٹ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ فلموں کے ساتھ ہی پاکستان کے ٹیلی ویژن پر بھارت میں بنے اشتہارات کی نشریات پر بھی روک لگا دی گئی ہے۔ پاکستانی ایکسیبیٹروں کی ایسوسی ایشن کے اس فیصلے سے پہلے ہی بھارتی فلم سازوں نے پاکستان کے سینما گھروں میں فلمیں بھیجنا بند کر دیا تھا۔ اندر کمار کی ٹوٹل دھمال کے علاوہ لکا چھپی، میڈ ان چائنا سمیت تمام فلموں کو پاک نہ بھیجنے کا فیصلہ کیا جا چکا ہے۔ پلوامہ میں ہوئے دہشت گردانہ حملے کے بعد ہی بالی وڈ کی فلموں کو پاکستان بھیجنے پر خود روک لگائی گئی تھی، ساتھ ہی پاکستانی گلوکاروں کے بھارتی البموں میں کام کرنے پر بھی روک لگ چکی ہے۔ فلموں کے تکنیکی ماہرین کی ایسوسی ایشن نے وزیر خارجہ سشما سوراج کو خط لکھ کر پاکستان کے فنکاروں اور گلوکاروں کے ویزا منسوخ کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

You May Also Like

Notify me when new comments are added.